Poets

350+ Original Mirza Ghalib Poetry in Urdu | Ghalib Shayari

Original Mirza Ghalib Poetry

Sad Mirza Ghalib Poetry in Urdu

آنکھ کی تصویر سر نامے پہ کھینچی ہے کہ تا
تجھ پہ کھل جاوے کہ اس کو حسرت دیدار ہے

Aankh ki tasvir sar-namë pë khëënchi hai ki ta
Tujh pë khul jaavë ki iss ko hasrat-ë-didar hai.

آج واں تیغ و کفن باندھے ہوے جاتا ہوں میں
عذر میرے قتل کرنے میں وہ اب لاویں گے کیا

Aaj vaan tëgh o kafan bandhë huë jaata hoon main
Uzr mërë qatl karnë mëin woh ab lavëngë kya.

کیوں نہ فردوس میں دوزخ کو ملا لیں یا رب
سیر کے واسطے تھوڑی سی جگہ اور سہی

Kyun na firdaus mëin dozakh ko mila lëin yarab
Sair kë vastë thodi si jagah aur sahi.

رات دن گردش میں ہیں سات آسماں
ہو رہے گا کچھ نہ کچھ گھبرائیں کیا

Raat din gardish mëin hain saat asman
Ho rahëga kuch na kuch ghabrayëin kya.

کلکتے کا جو ذکر کیا تو نے ہم نشیں
ایک تیر میرے سینے میں مارا کہ ہائے ہائے

Kalkattë ka jo zikr kiya tu në hum-nashin
Ëk tëër mërë sëënë mëin maara ki haayë haayë.

Mirza Ghalib Best Poetry in Urdu

دایم پڑا ہوا تیرے در پر نہیں ہوں میں
خایک ایسی زندگی پہ کہ پتھر نہیں ہوں میں

Daaim pada hua tërë dar par nahi hoon main
Khaak aisi zindagi pë ki patthar nahi hoon main.

سنتے ہیں جو بہشت کی تعریف سب درست
لیکن خدا کرے وہ تیرا جلوہ گاہ ہو

Suntë hain jo bahisht ki tarif sab durust
Lëkin khuda karë woh tëra jalva-gah ho.

اس نزاکت کا برا ہو، وہ بھلے ہیں تو کیا
ہاتھ آویں تو انہیں ہاتھ لگائے نہ بنے

Is nazakat ka bura ho woh bhalë hain toh kya
Haath aavëin toh unhëin haath lagaayë na banë.

کہہ سکے کون کہ یہ جلوہ گری کس کی ہے
پردہ چھوڑا ہے وہ اس نے کہ اٹھائے نہ بنے

Këh sakë kaun ki yë jalvagari kis ki hai
Parda choda hai woh us në ki uthayë na banë.

اس لب سے مل ہی جائے گا بوسہ کبھی تو ہاں
شوق فضول و جرأت رندانہ چاہئے

Us lab së mil hi jaayëga bosa kabhi toh haan
Shauq-ë-fuzul o jurat-ë-rindana chaahiyë.

Previous page 1 2 3 4 5 6 7 8 9 10 11 12 13 14 15 16 17 18 19 20 21 22 23 24 25 26 27 28 29 30 31 32Next page

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button