Poets

350+ Original Mirza Ghalib Poetry in Urdu | Ghalib Shayari

Original Mirza Ghalib Poetry

Sad Mirza Ghalib Poetry in Urdu

میں نے چاہا تھا کہ اندوہ وفا سے چھوٹوں
وہ ستم گر میرے مرنے پہ بھی راضی نہ ہوا

Main në chaha tha ki andoh-ë-wafa së chutun
Woh sitamgar mërë marnë pë bhi raazi na hua.

گنجینۂ معنی کا طلسم اس کو سمجھیے
جو لفظ کہ غالب میرے اشعار میں آوے

Ganjina-ë-maani ka tilism us ko samajhiyë
Jo lafz ki ghalib mërë ashar mëin aavë.

تماشا کہ اے محو آئینہ داری
تجھے کس تمنا سے ہم دیکھتے ہیں

Tamasha ki ayë mahv-ë-aaina-dari
Tujhë kis tamanna së hum dëkhtë hain.

داغ فراق صحبت شب کی جلی ہوئی
ایک شمع رہ گئی ہے سو وہ بھی خموش ہے

Dagh-ë-firaq-ë-sohbat-ë-shab ki jali hui
Ëk shama rëh gayi hai so woh bhi khaamosh hai.

خدایا جذبۂ دل کی مگر تاثیر الٹی ہے
کہ جتنا کھینچتا ہوں اور کھنچتا جائے ہے مجھ سے

Khudaya jazba-ë-dil ki magar tasir ulti hai
Ki jitna khëënchta hoon aur khëënchta jaayë hai mujh së.

Urdu Shayari by Mirza Ghalib

مضمحل ہو گئے قویٰ غالب
وہ عناصر میں اعتدال کہاں

Muzmahil ho gayë qava ghalib
Woh anasir mëin ëtidal kahan.

شوریدگی کے ہاتھ سے ہے سر وبال دوش
صحرا میں اے خدا کوئی دیوار بھی نہیں

Shoridgi kë haath së hai sar vabal-ë-dosh
Sahra mëin ayë khuda koi divar bhi nahi.

رہے نہ جان تو قاتل کو خوں بہا دیجے
کٹے زبان تو خنجر کو مرحبا کہیے

Rahë na jaan toh qaatil ko khun-baha dëëjë
Katë zaban toh khanjar ko marhaba kahiyë.

پی جس قدر ملے شب مہتاب میں شراب
اس بلغمی مزاج کو گرمی ہی راس ہے

Pi jis qadar milë shab-ë-mahtab mëin sharab
Is balghami-mizaj ko garmi hi raas hai.

رشک کہتا ہے کہ اس کا غیر سے اخلاص حیف
عقل کہتی ہے کہ وہ بے مہر کس کا آشنا

Rashk këhta hai ki us ka ghair së ikhlas haif
Aql këhti hai ki woh bë-mëhr kis ka ashna.

Previous page 1 2 3 4 5 6 7 8 9 10 11 12 13 14 15 16 17 18 19 20 21 22 23 24 25 26 27 28 29 30 31 32Next page

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button