Poets

220+ Allama Iqbal Poetry in Urdu | Dr Allama Iqbal Shayari

Original Allama Iqbal Poetry in Urdu

Allama Iqbal Poetry Urdu

ظاہر کی آنکھ سے نہ تماشا کرے کوئی
ہو دیکھنا تو دیدۂ دل وا کرے کوئی

Zahir ki aankh së na tamasha karë koi
Ho dëkhna toh dida-ë-dil va karë koi.

ہیں عقدہ کشا یہ خار صحرا
کم کر گلۂ برہنہ پائی

Hain uqda-kusha yë khar-ë-sahra
Kam kar gila-ë-barhana-pai.

یہ ہے خلاصۂ علم قلندری کہ حیات
خدنگ جستہ ہے لیکن کماں سے دور نہیں

Yë hai khulasa-ë-ilm-ë-qalandari ki hayat
Khadang-ë-jasta hai lëkin kaman së door nahi.

یہ کائنات ابھی ناتمام ہے شاید
کہ آ رہی ہے دمادم صدائے کن فیکوں

Yë kaayënaat abhi na-tamam hai shayad
Ki aa rahi hai damadam sada-ë-kun-fayakun.

عقل عیار ہے سو بھیس بدل لیتی ہے
عشق بیچارہ نہ زاہد ہے نہ ملا نہ حکیم

Aql ayyar hai sau bhës badal lëti hai
Ishq bëchara na zahid hai na mulla na hakim.

Allama Iqbal Poetry in Urdu for Students

خودی کو کر بلند اتنا کہ ہر تقدیر سے پہلے
خدا بندے سے خود پوچھے بتا تیری رضا کیا ہے

Khudi ko kar buland itna ki har taqdir së pahlë
Khuda bandë së khud puchë bata tëri raza kya hai.

ستاروں سے آگے جہاں اور بھی ہیں
ابھی عشق کے امتحاں اور بھی ہیں

Sitaron së aagë jahan aur bhi hain
Abhi ishq kë imtihan aur bhi hain.

مانا کہ تیری دید کے قابل نہیں ہوں میں
تو میرا شوق دیکھ میرا انتظار دیکھ

Maana ki tëri dëëd kë qabil nahi hoon main
Tu mëra shauq dëkh mëra intëzaar dëkh.

اسے صبح ازل انکار کی جرأت ہوئی کیونکر
مجھے معلوم کیا وہ رازداں تیرا ہے یا میرا

Usë subh-ë-azal inkar ki jurat hui kyunkar
Mujhë malum kya woh raz-dan tëra hai ya mëra.

میرے جنوں نے زمانے کو خوب پہچانا
وہ پیرہن مجھے بخشا کہ پارہ پارہ نہیں

Mërë junun në zamanë ko khoob pahchana
Woh pairahan mujhë bakhsha ki paara paara nahi.

Previous page 1 2 3 4 5 6 7 8 9 10 11 12Next page

2 Comments

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button